Saturday, March 11, 2017

اونٹ نگلنا ۔۔ مگر مچھر چھاننا



اونٹ نگلنا ۔۔ مگر مچھر چھاننا

آج کل زور و شور سے دیندار خواتین و حضرات اسلام دشمن و توہین رسالت پر مبنی سوشل میڈیا مواد پاکستان میں بند کروانے پر لگے ہوئے ہیں۔اخبارات میں اشتہار چھپوائے جا رہے ہیں ٹوئٹر فیس بک پر مسلسل پیغام دیے جارہے ہیں لوگوں کو متوجہ کیا جا رہا ہے۔ایف آئی اے اور پی ٹی اے جیسے ادارے ہمہ وقت تیار ہیں جیسے ہی عوام کسی مواد کی نشاندہی کریں وہ اسے فوراً ناظرین کے لئے بند کردیں۔

تھانے کے ایس ایچ او سے لیکر وزیر داخلہ تک سب متحرک ہیں‘ دینی غیرت کا معاملہ ہے‘ چند ٹی وی اینکروں نے تو اسی غیرت کو استعمال کرکے اپنی ریٹنگ تک بڑھا لی ہے۔ بہت اچھا بہت مناسب۔۔۔مگر بھائیوں آپ سب کر کیا رہے ہو‘ کیا یہ مستقل حل ہے‘ کیا یہ پائیدار اور مناسب طریقہ ہے جو تمام جہات کا احاطہ کرتا ہے‘ سوچنے کی اصل بات یہ ہے۔

Saturday, January 7, 2017

خداراہ ۔۔ نبی رحمت (صلی اللہ علیہ وسلم) کو ۔۔ نبی زحمت نہ بنائیے


اللہ کے آخری رسول صلی اللہ علیہ وسلم سے محبت عین ایمان ہے اس جزو کے بغیر ایمان مکمل ہی نہیں ہوتا کہ رسو ل رحمت صلی اللہ علیہ وسلم کی اطاعت ہی در حقیقت اللہ کی اطاعت ہے۔شاید ہی مسلمانوں کا کوئی طبقہ یا مکتب فکر ایسا ہو جو اس سے انکار کرے۔اسی طرح توہین رسالت بھی ایک متفقہ موضوع ہے کوئی مسلمان ہو ہی نہیں سکتا اگر اسکے دل و زبان پر توہین نبی رحمت کا شائبہ تک آ گیاہو۔لیکن اگر کوئی شخص توہین رسالت کا مرتکب پایا جائے تو اس کے ساتھ کیا سلوک کیا جائے گا اس میں مختلف اقوال ہیں۔ سب سے پہلے دیکھتے ہیں اللہ کے رسول صلی اللہ علیہ وسلم خود ایسے معاملات کیسے طے کیا کرتے تھے۔

Wednesday, January 4, 2017

بھارتی فلموں پر پابندی --- تصویر کا دوسرا رخ



ہم۔۔پاکستانی۔۔ ایک دوسرے کی حب الوطنی بھارتی فلموں کو نہ دیکھنے سے پرکھنے کی کوشش کر رہے ہیں۔اس کوشش کے پیچھے دلیلوںکا خلاصہ یہ ہے کہ ”بھارت پاکستان کا ازلی دشمن ہے اور ہمیں برباد کرنا چاہتا ہے۔1971ءمیں اس نے ہمیں تقسیم کیا اور آج بھی اپنی فلموں سے ہمیں اپنی ثقافتی یلغار کا نشانہ بنانا چاہتا ہے۔“ 

اسی سبب جو پاکستانی سینما مالکان نہایت بے شرمی سے بھارتی فلموں کی نمائش دوبارہ شروع کر رہے ہیں و محب وطن نہیں ہیں‘ حکومت نام کی کوئی شے اگر پاکستان میں ہے تو انہیں روکے وغیرہ وغیرہ۔